کاریتاس نے معذوروں کا عالمی دن منایا

وبائی مرض کورونا وائرس نے معذور افراد کی معمولات زندگی پر گہرا اثر ڈالا ہے (منشا نور)

کراچی (آگاہی نیوز)معذور افراد کا بین الاقوامی دن(IDPD) ہر سال 3 دسمبر کو منایا جاتاہے۔ تاکہ معذور افراد کی مساوی اور مکمل شراکت کو فروغ دیا جا سکے۔ اور معاشرے اور ترقی کے تمام پہلوؤں میں معذور افراد کی شرکت کے لئے عملی طور پر اقدامات اٹھائے جا سکیں۔ اس سلسلہ میں کاریتاس پاکستان کراچی اور احساسِ انسانیت ویلفئیر سروسز(AICWS) نے مشترکہ طور پر معذور(PWD) افراد کے اہل خانہ کے ساتھ ” دوبارہ بہتر تعمیر” قابلِ رسائی اور پائیدار اورمعذورں کی شمولیت کے تھیم کے ساتھ 3 دسمبر 2020؁ء کو لیاری سیکٹر 51، خدا کی بستی، میر خان گوٹھ میں تحفے کے طور پر 40 معذور افراد کے خاندانوں میں راشن تقسیم کیا۔ اس تقسیم کا مقصد معذور افراد میں راشن کے تحفے کے ذریعے بغیر کسی تفریق کے ہندو، مسلمان اور کرسچن معذور افراد(PWD) کے خاندانوں کے ساتھ یکجہتی کے طور پر خوشیاں بانٹنا اور ایک انسانی گھرانہ کی صورت میں کورونا وائرس کے خلاف لڑنا تھا۔ مسٹر عامر روبن (M&E) آفیسر نے کہا کہ کسی بھی گھر میں معذور(PWD) یا اسپیشل افراد کی موجودگی خدا کی طرف سے ہوتی ہے اور یہ بعض اوقات اس گھر کے لئے برکت کا باعث بھی ہوتے ہیں۔ آج راشن کا تحفہ جو خاندان وصول کریں گے وہ ان اسپیشل افراد کی وجہ سے ہی ان تک پہنچ رہا ہے۔ انہوں نے مزیف کہا کہ خوشی ہے کہ آج وہ ان افراد کے ساتھ کچھ وقت گذار رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ یہ افراد خاص توجہ چاہتے ہیں لہذا ان کے ساتھ وقت گذاریں، ان کے ساتھ کھیلیں اور اُن کے ساتھ مل کر دعا کریں اس سے ان کی ذہنی صحت بہتر ہو گی۔ جناب منشانور (ایگزیکٹیو سیکرٹری کاریتاس پاکستان کراچی) نے اپنے کلمات میں کہا کہ ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن کے مطابق پوری دنیا میں آبادی کے لحاظ سے تقریباً 15 فیصد (ایک ارب) افراد معزوری کی زندگی بسر کر رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ تحمینے کے مطابق ان میں سے450 ملین یعنی 45 کروڑ افراد ذہنی و اعصابی کی حالت میں زندگی گذار رہے ہیں۔ جبکہ دو تہائی افراد بندنامی اور امتیازی سلوک کے باعث طبی مدد نہیں لیتے۔ انہوں نے اپنی بات سمیٹتے ہوئے کہاکہ وبائی مرض کرونا وائرس کے باعث سماجی دوری، رابطہ کی منقطحی اور سماجی سطح پر ہونے والی خدمات کی کمی نے خاص طور پر معذور افراد کی معمولات زندگی پر گہرا اثر ڈالا ہے۔
احساس انسانیت ویلفئیر سروسز، کاریتاس پاکستان کراچی کی ٹیم اور ولانٹیرز نے عزت و احترام کے ساتھ معذور افراد کے دروازے پر راشن کے تحائف پہنچائے۔ آخر میں کاریتاس نت جناب نثار اشرفی (چئیر میں احساس انسانیت) کا شکریہ ادا کی کیا ان کی مدد سے معذوروں کے عالمی دن کے موقع پر راشن کت تحائف ان تک پہنچائے جا سکے۔ کاریتاس نے معزز ڈونرز اور ان کے خاندان کے لئے نیک تمناؤں کا اظہار کیا کہ خدا نہیں مزید برکات و فضائل سے نوازے۔

Samson

Read Previous

سیونگ لائیو ویلفیئر آرگنائزیشن (بدین پراجیکٹ)

Read Next

”کیتھولک معذورافراد کوپاک ساکرامنٹس وصول کرنے کا حق حاصل ہے“پوپ فرانسس

Leave a Reply

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے