فدائین بیداغ مریم کی جماعت کیلئے مقامی کلیسیا میں ایک یادگار سنگِ میل

0
88

بشپ اندریاس اور فادر خان پولوس کے باہمی اتفاق سے دوبارہ فیصل آباد ڈایوسیس میں فدائین کی آمد

معاہدے پر فادر خان پولوس اور بشپ اندریاس نے کاہنوں اور مومنین کی بڑی تعداد کے سامنے دستخط کئے

فیصل آباد(آگاہی نیوز)پاکستان میں فدائین بیداغ مریم کے لئے ۱۸ نومبر ۲۰۲۰ء،فیصل آباد ڈایوسیس میں نئے پیرش کا حصول دوہری خوشی کا باعث ہے، جب وہ نہ صرف فیصل آباد ڈایوسیس میں دوبارہ داخل ہوتے ہیں بلکہ پاکستا ن میں اپنی موجودگی اور اپنی ماضی کی یادوں کو تازہ کرتے ہیں ۔فدائین بیداغ مریم نے ۱۹۷۱ء میں بشپ چیلیو کے کہنے پر اپنے مشن کا آغاز کیا جب کوئٹہ وی کیریٹ کے موجودہ بشپ وکٹر یانا پراگاسم (او۔ایم ۔آئی) تب کے فادر وکٹر نے اپنے چند ہم جماعت کاہنوں کے ساتھ اپنی خدمات کا گوجرہ سے آغاز کیا۔اسکے علاوہ فدائین بیداغ مریم پیرمحل میں بھی اپنی خدامات سرانجام دے چکے ہیں جہاں وہ ۲۰۰۲ء تک موجود رہے۔۸ا سال کے طویل عر صے کے بعد فیصل آباد کے بشپ اندریاس اور فدائین بیداغ مریم کے سردار فادر خان پولوس(او۔ایم ۔آئی) کے باہمی اتفاق سے دوبارہ فیصل آباد ڈایوسیس میں فدائین کی آمد ہوئی۔ ۱۸ نومبر ۲۰۲۰ء کے تاریخ ساز دن کے موقعہ پر شکر گزاری کی پاک ماس کا اہتمام کیاگیا۔ معاہدے پر فادر خان پولوس ( او۔ایم ۔آئی) اور بشپ اندریاس نے کاہنوں اور مومنین کی ایک تعداد کے سامنے دستخط کئے۔ پیرش جو بنیادی طور پر سینٹ جیمس پیرس کا حصہ تھا تقسیم کردیا گیا اور سینٹ میریز کے نام سے نئے پیرش کا افتتاح کیا گیا۔ اس موقع پر کلیسیائی رسم کے مطابق کنجیاں بشپ اندریاس کے دستِ مبارک سے فادر خان پولوس (او۔ایم۔آئی) کے حوالے کی گئیں اور فادر امانت چمن (او۔ایم ۔آئی) کو پیرش پریسٹ مقرر کیا گیا۔اس خوشی کے موقع پر فیصل آباد کے سینئر کاہن فادر بونی مینڈس نے فدائین بیداغ مریم کی دوبارہ آمد پر نیک خواہشات کا اظہار کیا اور ساتھ ہی ساتھ بلند خیالی کی تلقین کی۔ٹیلی فونک پیغام میں کوئٹہ کے بشپ وکٹر یانا پراگاسم ( او۔ایم ۔آئی)نے اس سنگ ِ میل کو خوش آئین قرار دیا۔ ساتھ ہی ساتھ فادر خان پولوس کی اس کاوش کے لئے اور پاکستان میں فدائین بیداغ مریم کی فیصل آباد میں تاریخی واپسی کے لئے ان کا شکریہ ادا کیا۔

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں